کراچی بورڈ نے نقل کو روکنے کے لیے پہلی بار سیکیورٹی بارکوڈ متعارف کرایا۔

کراچی بورڈ نے نقل کو روکنے کے لیے پہلی بار  سیکیورٹی بارکوڈ متعارف کرایا۔
  • May 23, 2024
  • 92

بورڈ آف انٹرمیڈیٹ ایجوکیشن کراچی (بی آئی ای کے) نے امتحانات میں نقل روکنے کے لیے بڑا فیصلہ کرلیا۔ نقل سے چھٹکارا پانے کے لیےپہلی بار امتحانی پرچوں میں سیکیورٹی پرنٹنگ متعارف کرائی ہے۔

دوسری جانب گرمی کی شدید لہر کے پیش نظر امتحانات کے دوران ہیٹ اسٹروک کی علامات میں مبتلا طلبہ کو فوری طبی امداد فراہم کرنے کے لیے میڈیکل ٹیمیں موجود رہیں گی۔

تفصیلات کے مطابق 28 مئی سے شروع ہونے والے انٹرمیڈیٹ کے امتحانات کے دوران طلباء کو بہترین سہولیات فراہم کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے، امتحانات کے دوران پہلی بار طلباء کو بخار، کمزوری، بخار سے بچنے کے لیے فرسٹ ایڈ باکس اور ادویات فراہم کی جائیں گی۔

ان ڈبوں میں درد کش ادویات، الرجی مخالف گولیاں، گلوکوز، وٹامن سی، اور منرل واٹر سب مفت ہوں گے۔ مزید برآں، امتحانی مراکز کے باہر ایمبولینسیں بھی دستیاب ہوں گی۔ نجی ادارے ان سہولیات کے لیے بورڈ کی مدد کریں گے۔

اس حوالے سے چیئرمین BIEK پروفیسر نسیم میمن نے اپنے دفتر میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ امتحانات کے دوران طلبہ کا خصوصی خیال رکھا جائے گا۔

صرف ان کالجوں کو امتحانی مراکز بنایا جا رہا ہے جن میں مطلوبہ سہولیات موجود ہیں۔ انہوں نے امتحان میں نقل کی روک تھام پر کہا کہ ہم نے پہلی بار سیکیورٹی پرنٹنگ متعارف کرائی ہے۔ ہر پیپر میں بار کوڈ ہوگا تاکہ امیدوار کی تمام تفصیلات معلوم کی جاسکیں۔

ایک سینٹر سپرنٹنڈنٹ افسر کو صرف ایک کالج میں تفویض کیا جائے گا تاکہ وہ تمام انتظامات کی دیکھ بھال کر سکے، جب کہ بورڈ نے ایک آفیشل ویب سائٹ، فیس بک، اور انسٹاگرام اکاؤنٹ بھی لانچ کیا ہے جہاں سے طلباء مارک شیٹس، سرٹیفکیٹس اور نتائج گھروں میں آرام سے حاصل کر سکتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ اب اس ایپلی کیشن کے ذریعے تمام تفصیلات طلباء تک پہنچ جائیں گی۔

You May Also Like