سندھ حکومت نے میٹرک اور انٹرمیڈیٹ کے امتحانات مئی سے لینے کا اعلان کر دیا۔

سندھ حکومت  نے میٹرک اور انٹرمیڈیٹ کے امتحانات مئی سے لینے کا اعلان کر دیا۔
  • April 25, 2024
  • 205

سندھ حکومت نے بدھ کو اعلان کیا کہ طلباء کے میٹرک اور انٹرمیڈیٹ کے امتحانات مئی سے ہوں گے۔

اس حوالے سے فیصلہ ایک اجلاس کے دوران کیا گیا جس کی صدارت سندھ کے وزیر تعلیم سید سردار علی شاہ اور وزیر یونیورسٹیز اینڈ بورڈز محمد علی ملکانی نے کی۔

اجلاس میں آئندہ ماہ سے صوبہ سندھ بھر میں شروع ہونے والے میٹرک اور انٹرمیڈیٹ بورڈ کے امتحانات کے انتظامات کا تفصیلی جائزہ لیا گیا۔

اجلاس میں امتحانی مراکز کے گرد دفعہ 144 نافذ کرنے اور امتحانی مراکز میں امیدواروں سے موبائل فون ضبط کرنے کا بھی فیصلہ کیا گیا۔

اجلاس میں سیکرٹری یونیورسٹیز اینڈ بورڈز نور احمد سمون، سیکرٹری سکول ایجوکیشن زاہد علی عباسی، سیکرٹری کالج ایجوکیشن صدف انیس شیخ، بورڈز کے چیئرمین، سیکرٹریز اور دیگر متعلقہ افسران نے شرکت کی۔

اجلاس میں بورڈ کے سربراہان کی جانب سے میٹرک اور انٹرمیڈیٹ کے امتحانات کے حوالے سے تفصیلی بریفنگ دی گئی۔

اجلاس کے دوران بتایا گیا کہ مئی کے پہلے ہفتے میں میٹرک اور مئی کے آخر میں انٹرمیڈیٹ کے امتحانات لینے کی تیاری مکمل کر لی گئی ہے۔

کراچی میں میٹرک کے امتحان کے لیے 250 امتحانی مراکز قائم کیے گئے ہیں جن میں 3 لاکھ 50 ہزار 198 امیدوار شرکت کریں گے۔

 کراچی میں پبلک سیکٹر اسکولوں سے کم از کم 73,724 اور پرائیویٹ سیکٹر کے اسکولوں کے 276,474 امیدوار میٹرک کے امتحان میں شریک ہوں گے۔

اسی طرح کراچی میں تقریباً 290,220 امیدواران انٹرمیڈیٹ کے امتحان میں شرکت کریں گے۔

اجلاس میں حیدرآباد، میرپورخاص، شہید بے نظیر آباد، لاڑکانہ اور سکھر ڈویژن کے سربراہان نے بھی بریفنگ دی۔

وزیر جامعات و بورڈ محمد علی ملکانی نے کہا کہ سندھ حکومت امتحانی نظام کو ہر لحاظ سے بہتر بنانے میں سنجیدہ ہے۔

You May Also Like